[miniorange_social_login apps="google" shape="longbuttonwithtext" view="horizontal" theme="default" space="10" width="200" height="35" color="000000"] یا پھر بذریعہ ای میل ایڈریس کیجیے

پارس

پارس ۔ قسط 5

پانچویں قسط :   ننھی پارس جھولے میں لیٹی   جھنجنے کو اپنے ننھے منے ہاتھوں میں دبائے اسے الٹ پلٹ رہی تھی۔جھنجھنے  کے بجنے سے پیدا  ہونے والی چھن چھن کی آواز پر پارس کی آنکھوں کی چمک  مزیدبڑھ جاتی اور وہ خوش ہو کر تیزی سے ہاتھ پیر مارنے …

مزید پڑھیے »

پارس ۔ قسط 4

چوتھی قسط :   چوتھی قسط : سب سے آگے جمال اور ماسی سرداراں کی بیٹی شاداں کو دیکھ کر اس کی پریشانی بڑھ گئی تھی۔ وہ جانتا تھا ان کی موجودگی میں خیر کم ہی ہو تی ہے۔ ہا ہاہا …. طنزیہ انداز میں ہلکا سا قہقہہ لگاتے ہوئے …

مزید پڑھیے »

پارس ۔ قسط 3

تیسر ی قسط :   تیسری قسط : سکینہ ….بانو حیرت سے بولی وہ بھلا کیا مدد کرے گی میری؟…. ارے باجی یہ الگ بات ہے کہ وہ ہمیں نہیں بھاتی مگر گاؤں کی اکثریت اس کی بات سنتی ہے اور پھر بھائی شفیق کی بھی تو کتنی عزت ہے …

مزید پڑھیے »

پارس ۔ قسط 2

دوسر ی قسط : گھر میں پھیلی سوگواری نے سکینہ کے قدم دروازے پر ہی روک دئیے تھے۔پسینے سے شرابور پھولی ہوئی سانسوں پر قابو پاتے ہوئے اس نے ادھ کھلے دروازے کے اوٹ سے اندر جھانک کر دیکھا۔برآمدہ میں دھوپ پھیلی ہوئی تھی۔بانو کے کمرے میں سے چند عورتوں …

مزید پڑھیے »

پارس ۔ قسط 1

پہلی قسط : برگد کے درخت پر چڑیا کے دو بچے جنھوں نے ابھی کچھ ہی دیر پہلے دنیا میں سانس لی تھی چیں چیں کرتے دانہ کا تقاضہ کر رہے تھے۔ چڑا چڑیا انہیں دیکھ کر نہال ہوئے جارہے تھے۔چڑِا پُھر سے اُڑا کہ کچھ دانے کا انتظام کرے۔ …

مزید پڑھیے »